قرآن اور سائنس : قرآن کے سائنسی خیالات نے مجھے محو حیرت کر دیا

قرآن کے سائنسی خیالات نے مجھے محو حیرت کر دیا ۔ اس وقت تک میں نے یہ سوچا بھی نہیں تھا کہ تیرہ سو سال پہلے کی تحریریں جس میں انتہائی مختلف النوع مضامین بیان ہوئے ہیں، جدید سائنسی معلومات سے کلی طور پر ہم آہنگ ہوں گے۔ میری رائے میں اس کے لیے کوئی تاویل ممکن نہیں کہ جس زمانہ میں ’’ڈیگوگوبرت‘‘(639 – 629ء) فرانس میں حکومت کر رہا تھا، اس وقت جزیرۃ العرب کا ایک باشندہ بعض موضوعات پر ایسی سائنسی معلومات رکھتا ہو جو ہمارے زمانے سے بھی دس صدی بعد کے دور سے تعلق رکھتی ہوں۔ میں نے کوشش کی ہے کہ قرآن میں ان حوادث کا ذکر بھی تلاش کروں جن تک انسانی فہم و ادراک کی رسائی ہے لیکن جن کو جدید سائنس نے تسلیم نہیں کیا، مجھے قرآن میں کائنات کے ایسے سیارگان کا ذکر ملا ہے جو کرہء ارض کے مشابہہ ہیں اور یہاں یہ اضافہ کر دینا ضروری ہے کہ بہت سے سائنس دان اس کو مکمل طور پر قابل عمل سمجھتے ہیں۔

(’’بائبل‘‘ قرآن اور سائنس از موریس بوکائیٹے)

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s